effects-of-tobacco-on-human-being

تمباکو ہی نہیں تمباکو کا پودا بھی مضر صحت ہے.


تمباکو ایک زرعی  پیداوار ہے جو تمباکو کے پودے  کے پتوں سے تیار کی جاتی ہے۔ یہ سگریٹ، پان اور نسوار میں استعمال ہونے کے علاوہ کیڑے مارادویات میں بھی استعمال ہوتا ہے. نکوٹین تمباکو کے پودے میں پایا جانے والا ایک زہر ہے اور سگریٹ کا اہم منشیاتی جزو ہے۔ نکو ٹین تمباکو کا ایک اہم جزو ہے۔ تمباکو اس وقت دنیا میں سب سے زیادہ استعمال ہونے والی تفریحی دوا کے طور پر بہت زیادہ استعمال کیا جاتا ہے۔ یہ نشہ آور ادویات میں سے ہے اور صحت پر انتہائی مضر اثرات مرتب کرتی ہے۔ اسے اکثر پیا بھی جاتا ہے. تاہم کچھ لوگ اس کو چباتے بھی ہیں اور کبھی کبھار جلائے بغیر سانس کے ذریعے کھینچتے بھی ہیں۔ نکوٹین منشیاتی ادویات میں سے بدنام ترین دوا ہے. ہر سال تمباکو نوشی سے دنیا بھر میں لاکھوں اموات ہوتی ہیں۔
Tobacco-effects-on-human-health

رگوں میں پھیلتا زہر ! تمباکو
نوجوان کسی بھی قوم کا سرمایہ ہوتے ہیں۔ اسی لئے دنیا بھر میں نوجوانوں کی کردار سازی اور صلاحیتوں کو بڑھانے کے لئے خصوصی توجہ دی جا رہی ہے۔ ایک صحت مند نوجوان اپنے خاندان، ملک و قوم کے لئے مثبت اور تعمیری کام سرانجام دیتا ہے۔ دنیا بھر میں نوجوانوں کی صحت اور دیگر سماجی فرائض کے حوالے سے سکول سے ہی تربیت شروع کردی جاتی ہے اور خاص طورپر تمباکو نوشی کے نقصانات کے حوالے سے اُن کو بچپن سے ہی آگاہ کرنا شروع کردیا جاتا ہے. عالمی صحت کو لاحق خطرات میں تمباکو نوشی کی وباء سب سے تباہ کن ہے۔ ورلڈ ہیلتھ آرگنائزیشن کے مطابق دنیا بھر میں سالانہ ساٹھ لاکھ افراد تمباکو نوشی سے ہونے والی بیماریوں میں مبتلا ہوکر زندگی سے ہاتھ دھو بیٹھتے ہیں.ان لوگوں میں سے زیادہ تر افراد خود تمباکونوشی نہیں کرتے بلکہ تمباکونوشی کے ماحول میں موجود ہونے کے سبب اس کے دھوئیں کا شکار ہوجاتے ہیں۔
دنیا بھر میں ایک ارب سے زائد لوگ تمباکونوشی کرتے ہیں جن میں سے اسی فیصد لوگ ترقی پذیر ممالک سے تعلق رکھتے ہیں۔ پاکستان، بھارت، فلپائن، تھائی لینڈ اور کمبوڈیا میں تمباکو نوشی کی شرح تیزی سے بڑھ رہی ہے اور اس اضافے کا بڑا سبب ان ممالک کا نوجوان طبقہ ہے۔ ترقی یافتہ ممالک میں جاپان اور چائنہ کے ساٹھ فیصد مرد حضرات سگریٹ نوشی کی عادت میں بری طرح مبتلا ہیں۔ سگریٹ نوش آبادی میں بارہ فیصد خواتین شامل ہیں جبکہ روزانہ ایک لاکھ بچے سگریٹ نوشی شروع کردیتے ہیں۔
تمباکو نوشی کے نقصانات

  • تمباکو نوشی سے دل کے امراض اور پھیپڑوں کے سرطان جیسی خطرناک بیماریاں لاحق ہوتی ہیں اور تمباکو نوشی کرنے والااپنی اوسط عمر سے پندرہ سال پہلے دنیا سے گزر جاتا ہے۔
  • طبی ماہرین کے مطابق ایک سگریٹ انسان کی عمر آٹھ منٹ تک کم کر دیتا ہے کیونکہ اس میں چار ہزار سے زائد نقصان دہ اجزاموجود ہوتے ہیں۔
  • تمباکو نوشی سے انسان کو دل، پھیپھڑے، سانس، نظام ہضم، پیشاب،  معدہ، جگر اور منہ کی بہت سی مہلک بیماریوں کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔
  • تاہم جب آپ تمباکو نوشی کو ترک کردیتے ہیں اور ان چار ہزار سے زائد نقصان دہ اجزاءکو دھویں کی شکل میں اپنے جسم کا حصہ نہیں بننے دیتے تو آپ کی صحت پر لاتعداد مثبت اثرات مرتب ہوتے ہیں.